Tag Archives: Lala Muneer Baloch

جلسہ عام:‌ مئی 15مند، تربتءِ شہیدانی نام ءَ

جلسہ عام:‌ مئی 15مند، تربتءِ شہیدانی نام ءَ

 

شہدائے تربت شہید غلام‌محمد بلوچ اور شہید شیر محمد بلوچ کا چہلم 15 مئی بروز جمعہ کو مند میں‌ہورہا ہے اور بلوچستان سمیت مکران بھرسے جبکہ کراچی سے بھی لوگوں کی بڑی تعداد شہیدوں‌کے چہلم اور عظیم الشان جلسہ عام میں‌شرکت کرے گی۔ چہلم کے بعد شام کو ایک عظیم الشان جلسہ ہوگی جس سے بلوچ رہنماء خطاب کریںگے اور شہیدوں‌کی قربانیوں کو خراج عقیدت پیش کریں گے۔ جبکہ شہید لالہ منیرکا چہلم 17 مئی کو ان کے آبائی علاقہ پنجگور میں‌ہوگی۔ (روزنامہ انتخاب)۔

Advertisements

Leave a comment

Filed under Ghulam Muhammad Baloch, Pictures

شہدائے تربت:‌ بلوچ راجی رھدربرانی شھید بوتگین لاش‌

Video: Shaheed-e-Turbat; 

Continue reading

1 Comment

Filed under Video

بلوچستان میں احتجاج، پہیہ جام ہڑتال

بلوچ نیشنل فرنٹ کی اپیل پر بلوچستان، کراچی اور اندرون سندھ بلوچ علاقوں میں پہیہ جام ہرتال ہے۔

اس دوران حب، تربت اور چاغی میں مظاہرے اور سڑکوں پر ٹائرجلانے کی اطلاعات ہیں تاہم کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش نہیں آیا ہے۔ کوئٹہ میں ہڑتال کے دوران تمام کاروباری مراکزبند اور سڑکوں پر ٹرانسپورٹ نہ ہونے کے برابر تھی۔ اس موقع پر پولیس اور فرنٹیئر کور کے اہلکاروں کا گشت جاری ہے۔

کوئٹہ کے علاوہ نوشکی، دالبندین، چاغی، مستونگ، قلات، خضدار، لسبیلہ، حب، تربت، گوادر، پسنی، سبی، نصیرآباد، اور ڈیرہ بگٹی میں بھی ہرتال رہی۔

بی این ایف نے ہڑتال کی کال تربت کے پداگ کے علاقے سے آٹھ اپریل کوتین بلوچ قوم پرست راہنماؤں، غلام محمد بلوچ، شیرمحمد بلوچ، اور لالا منیر کی ہلاکت، بلوچستان میں جاری آپریشن، بلوچوں کی گمشدگی اور گرفتاریوں کے خلاف دی تھی۔

Continue reading

Leave a comment

Filed under News

بیٹے کو آزادی کے لئے قربان کرنے کو تیار ہوں۔ والدہ کبیر بلوچ

بلوچ وطن کی آزادی و تحفظ کے لئے میں‌اپنے بیٹوں کو قربان کرنے کے لئے تیار ہوں۔ چونکہ مادر وطن بلوچستان آج ہم سے قربانی کا تقاضا کررہا ہے جس طرح شہید اکبر بگٹی، شہید میر بالاچ مری، میر اسد مینگل، شہید نواب نوروز خان، شہید حمید بلوچ، اسلم گچکی، شہید شفیع بلوچ، شہید غلام محمد بلوچ، شہید لالا منیر، اور شہید شیر محمد بلوچ، اس سے قبل دیگر ہزاروں معلوم و نامعلوم بلوچوں نے دھرتی ماں کی پکار پر اپنے جانوں کو قربان کیا اس کے علاوہ سردار اختر جان مینگل سمیت دیگر ہزاروں نوجوانوں‌نے جیلوں میں اذیتیں برداشت کیں‌لیکن بلوچستان کی آزادی کے مطالبے سے ایک انچ بھی پیچھے نہیں‌ہٹے آج سیکنڑوں ماؤں نے اپنے جگر کے ٹکڑوں کو وطن پر قربان کیا ہے تو میں بھی اپنے بیٹے کبیر بلوچ و دیگر بیٹوں کو بھی بلوچ وطن کی آزادی کے نام کرتی ہوں۔ میں‌ان بزدل اور ریاستی تنخواہ خوروں سے اپنے بیٹے یا اس کے ساتھیوں‌کی رہائی کی اپیل کسی صورت نہیں کرونگی بلکہ صرف ایک بات کرونگی کہ صرف یہ بتادیں‌کہ ہمارے لخت جگر زندہ ہیں‌یا انہیں شہید کردیا گیا ہے اگر شہید کردیا گیا ہے تو ان کی لاشوں کو ہمارے حوالے کیا جائے

ستائیس مارچ کو خضدار سے دن دہاڑے سیشن کورٹ ڈی آئی جی آفس کے سامنے دوگاڑیوں میں سوار مسلح افراد نے کبیر بلوچ اور اس کے دیگر دو ساتھیوں عطاء اللہ بلوچ اور مشاق بلوچ کو اغواء کرکے لے گئے ان پر فائرنگ بھی کی گئی جو شدید زخمی ہوئے لیکن ایک ماہ گزرے جانے کے باوجود تاحال بازیاب نہیں‌ہوسکے۔

Leave a comment

Filed under News

شہید شیر محمد بلوچ – ایرانی شہری، اسناد پاکستانی؟

شیر محمد بلوچ

شہید شیر محمد بلوچ

پاکستان کے وزیر داخلہ رحمان ملک کی جانب سے ایرانی شہری قرار دیئے گئے بلوچ رہنما شیر محمد بلوچ کے ورثاء نے کراچی میں میڈیا کو ان کی تعلیمی اسناد اور دیگر دستاویزات دکھائی ہیں، جن کے مطابق انہوں نے کراچی کے تعلیمی اداروں سے تعلیم حاصل کی تھی۔


شیر محمد بلوچ کے سترہ سالہ بیٹے وقاص احمد نے جمعرات کو پریس کانفرنس میں بتایا کہ ان کا خاندان ایران میں نہیں بلکہ مند بلوچستان میں ہے اور ان کے والد کے پاس پاسپورٹ بھی نہیں تھا جس پر وہ کبھی ایران گئے ہوں۔


انہوں نے اپنے والد کی میٹرک اور انٹر کی اسناد دکھائیں جن میں شہید ملت روڈ کراچی پر واقع نیشنل کالج کا انیس سو نوے اکانوے کا کارڈ بھی شامل تھا جس میں شیر محمد بلوچ کو فرسٹ ایئر کا طالب علم بتایا گیا ہے۔


’دو ہزار دو کے انتخابات میں وہ صوبائی حلقے پی ایس 92 پر نیشنل الائنس کی جانب سے امیدوار تھے، ریکسر لائین میں ان کا ووٹ بھی درج ہے۔‘


شیر محمد بلوچ کو غلام محمد بلوچ اور لالہ منیر کے ساتھ تربت سے اغوا کیا گیا تھا۔ بعد میں ان کی مسخ شدہ لاشیں ملی تھی۔ گزشتہ روز وزیر داخلہ رحمان ملک نے پاکستان کے ایوان بالا یعنی سینیٹ میں پالیسی بیان دیتے ہوئے کہا تھا کہ شیر محمد ایرانی شہری تھے۔

شیر محمد کے بیٹے وقاص احمد کراچی میں زیرِ تعلیم ہیں اور اپنی ماں اور دو بہنوں اور ایک بھائی کے ساتھ یہیں رہتے ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ مشیر داخلہ رحمان ملک کے بیان سے انہیں بہت تکلیف پہنچی ہے کہ ایک نام نہاد جمہوری حکومت میں ایک پاکستانی شہری کو ایرانی شہری قرار دیا جا رہا ہے۔


انہوں نے اسی ملک سے تعلیم حاصل کی اور ان کی سندیں بھی موجود ہیں۔

شیر محمد کا خاندان ان کے قتل کے وقت بھی کراچی میں ہی تھا اور مند سے انہیں اس واقعے کی اطلاع دی گئی تھی۔


Leave a comment

Filed under News

Shutter down strike observed in parts of Balochistan

QUETTA: Complete and partial shutter down strike was observed in the city and Baloch populated areas of the province on the call of Balochistan National Party (Mengal) against the killing of three Baloch leaders in Turbat a couple of weeks ago.

In Mastung, Kalat, Khuzdar, Bolan and Noshki the strike call received a positive response and the traders unions kept their businesses shut.

In Mastung, the district government even announced a leave for all educational institutions.

Meanwhile, partial shutter down was observed in the provincial capital where most of the shopping centers and markets remained closed especially in Sariab and Brewery areas.

No incident of violence related to the strike has been reported from any part of the province.

Source

Leave a comment

Filed under News

Question on murders of Baloch leaders in Pakistan

Source: United Nations High Commissioner for Refugees (UNHCR)
Date: 17 Apr 2009

Q: You expressed UNHCR’s concern on Tuesday (April 14) over the killings of three Baloch leaders in Pakistan. The US Embassy in Pakistan later issued a press release saying that one of the three victims had actually played a role in efforts toward the release of abducted UNHCR official John Solecki. What can you say about that?

Spokesman: Yes, it’s true. As we said throughout John Solecki’s two-month hostage ordeal, we were very grateful for the support provided by the Baloch community and its leaders in securing John’s safe release. One of the leaders who took an active role in supporting John’s release was Mr. Ghulam Mohammed Baloch, who was found murdered along with two other men last week.

Continue reading

Leave a comment

Filed under News