بلوچستان کو شانت کرنے کی کوشش

تحریر : میر محمد علی ٹالپر
ترجمہ : لطیف بلیدی

بلوچ مخالف بیانات، بے لگام جبر اور سزا سے استثنیٰ کا کلچر قدرتی طور پر بلوچ کے ذہنوں میں تشویش اور شکوک پیدا کرے گا

Mir Muhammad Ali Talpur ’دہشتگرد زدہ‘ بلوچستان کو شانت کرنے کی کوششیں تاملوں کیخلاف سری لنکا کی طرف سے کی جانیوالی سفاکانہ تسخیری کارروائی جیسی حکمت عملی کیساتھ جلد شروع ہونیوالی ہیں اور پہلے ہی سے دہشت زدہ بلوچ عوام ان ہولناک اوقات کیلئے چشم براہ ہیں جو 2000 کے بعد سے عداوتوں کے اس پانچویں راونڈ میں مسلسل سفاکانہ حملوں کی زد میں ہیں۔ تاہم بلوچ کو محکوم بنانے کی یہ حکمت عملی پچھلی تمام کی جانیوالی کوششوں کی طرح ناکام ہوجائیگی کیونکہ جبر کے سبب اسوقت بلوچ عوم کے درمیان پائی جانیوالی بیگانگی اور مزاحمت پہلے سے کہیں زیادہ شدید ہے۔

Continue reading

Leave a comment

Filed under Mir Mohammad Ali Talpur

Balochistan: 13 including a brother and two nephews of BLF leader killed in Mashkay operation

Martyrs of Maskay

BALOCHISTAN: Pakistan forces besieged and attacked the village of Mehi in Mashkay Balochistan on early Tuesday morning. As a result at least 13 people were killed including a brother and two nephews of Dr Allah Nazar Baloch. Several others including women and children have reportedly been injured due indiscriminate shelling and bombardment by Pakistani forces.

Seven victims of Mashkary operation – described a #MashkayMassacre by Baloch social media activists, include Safar Khan, elder brother of Allah Nazar Baloch, Suleman Baloch aka Shayhak and Zakir Baloch both Allah Nazar’s sister’s son (Nephews), Ramzan Baloch, Aalam Baloch and two guests who had come to Mehi offer their condolences for the deceased father of  Suleman and Zakir Baloch who had passed away two days ago.

Continue reading

Leave a comment

Filed under News

مزاحمت و بقا

تحریر: میر محمد علی ٹالپر
ترجمہ: لطیف بلیدی

(نوٹ: یہ ان چار مضامین کی چوتھی اور آخری قسط ہے جو بیک وقت شائع ہوئی تھیں)

Mir Muhammad Ali Talpurصورتحال ایک ایسی نہج پر پہنچ چکی ہے کہ جہاں بلوچ کی جدوجہد کو کمزور کرنے کی خواہش میں اسٹابلشمنٹ ایسے اقدامات اٹھانے سے بھی نہیں کترا رہی جو نسل کشی سے قریب تر ہیں

نا انصافیوں نے بلوچ کو نہ صرف اپنے حقوق کیلئے بلکہ اپنی بقاء کیلئے بھی لڑنے پر مجبور کر دیا ہے۔ اسٹابلشمنٹ نے 60 اور 70 کی دہائیوں میں لاطینی امریکہ کی ’غلیظ جنگوں‘ کی طرز پر بلوچ کیخلاف ایک غلیظ جنگ چھیڑ رکھی ہے۔ جابر اسٹابلشمنٹ اور اس کی غلیظ جنگ نے بلوچ کیلئے اسکے سوا اور کوئی راستہ نہیں چھوڑا ہے کہ وہ اپنی آزادی کیلئے لڑیں اور یہ عمل 27 مارچ 1948 کے بعد سے شورش یا آزادی کی جدوجہد پر منتج ہوئی ہے۔ موجودہ مرحلہ گزشتہ کے مقابلے میں سب سے زیادہ شدید اور سب سے زیادہ اہم ہے۔ صورتحال ایک ایسی نہج پر پہنچ چکی ہے کہ جہاں بلوچ کی جدوجہد کو کمزور کرنے کی خواہش میں اسٹابلشمنٹ ایسے اقدامات اٹھانے سے بھی نہیں کترا رہی جو نسل کشی سے قریب تر ہیں؛ آواران میں حالیہ زلزلے کے دوران اسٹابلشمنٹ کی مخالفت کرنے اور بلوچ کی آزادی کیلئے ڈاکٹر اللہ نذر کی بہادرانہ جدوجہد کیلئے ان کی حمایت کرنے پر آواران کے لوگوں کو بغض و عناد کیساتھ سزا دینے کیلئے انہوں نے بین الاقوامی امداد لینے سے انکار کر دیا۔ منظم غلیظ جنگ میں مرنے والوں کی تعداد گزشتہ تین سالوں میں 700 سے تجاوز کرگئی ہے اور ہزاروں لاپتہ ہیں۔ سپریم کورٹ لاپتہ افراد کی بازیابی کیلئے محض زبانی جمع خرچ سے کام لیتا ہے؛ کسی ایک شخص پر بھی فرد جرم عائد نہیں کیا گیا ہے اگرچہ سپریم کورٹ نے اکثر فرنٹیئر کور اور انٹیلی جنس اداروں کے براہ راست ملوث ہونے کا اعتراف کیا ہے۔ یہ سب بلوچ کی طرف سے کی جانیوالی مزاحمت پر منتج ہوئی ہے جسے عام طور پر شورش قرار دیا جاتا ہے۔

Continue reading

Leave a comment

Filed under Mir Mohammad Ali Talpur

Journalist shot dead in Balochistan

Journalist under threat

Armed persons enter house of Zafarullah Jattak in Usta Muhammad and open indiscriminate firing, killing him on the spot

BALOCHISTAN: Unidentified men on Sunday shot dead journalist Zafarullah Jattak in Goth Jorak Jattak area of Usta Muhammad.

According to Usta Muhammad Deputy Superintendent of Police Khawand Bukhsh, the people carrying sophisticated weapons barged into Zafar’s home and opened fire on him. “As a result of intense firing he died on the spot while his killers managed to escape,” he added. Police and rescue workers rushed to the scene and shifted the body to a hospital for autopsy. Doctors said Zafar received multiple bullets in his head and chest.

Continue reading

Leave a comment

Filed under News

Pacifying Balochistan

Anti-Baloch rhetoric, unbridled repression and the culture of impunity naturally create concern and misgivings in the minds of the Baloch

Mir Muhammad Ali TalpurPacification of ‘terrorist-riddled’ Balochistan with the Sri Lankan strategy of brutal repression of Tamils is underway and terrible times await the already traumatised Baloch people who have been under constant attack in this fifth round of hostilities since independence. However, this strategy too will surely fail as have all previous attempts to subdue the Baloch because now alienation and resistance due to repression among the Baloch people is more intense than ever before.

Continue reading

Leave a comment

Filed under Mir Mohammad Ali Talpur

June 29: Shaheed Ibrahim Saleh Baloch

Leave a comment

June 28, 2015 · 3:00 pm

گراونڈ زیرو بلوچستان

تحریر: میرمحمد علی ٹالپر
ترجمہ: لطیف بلیدی

(نوٹ: یہ ان چار مضامین کی تیسری قسط ہے جو بیک وقت شائع ہوئی تھیں)

Mir Muhammad Ali Talpurفیصد کے حساب سے اضلاع کی محرومی کی اعلیٰ ترین سطح کی درجہ بندی مندرجہ ذیل ہے: پنجاب میں 29 فیصد، سندھ میں 50 فیصد، خیبر پختونخواہ میں 62 فیصد، اور بلوچستان میں 92 فیصد۔

معاشی محرومی اور جابرانہ سیاسی حالات کی سطح جو بلوچستان کو آج حاصل ہیں ان کی وجہ بار بار کیے جانیوالے فوجی آپریشن اور 1947 کے بعد سے معاشی استحصال جو عام طور پر عوام اور خاص طور پر لاپتہ افراد اور داخلی طورپر بے گھر افراد (آئی ڈی پیز) کیلئے بے پناہ مصائب پر منتج ہوئی ہے۔ وہاں کی ’سیاسی شورش‘ وفاق کی بے حسی اور طاقت کے بے لگام استعمال کی ایک طویل تاریخ کا براہ راست نتیجہ ہے۔

Continue reading

Leave a comment

Filed under Mir Mohammad Ali Talpur